UrduWorld

مکہ مکرمہ میں رواں سال حج کے دوران 500 سے زائد عازمین حج جاں بحق ہوۓ

غیر ملکی خبر ایجنسی کے مطابق رواں سال حج کے دوران 500 سے زائد عازمین حج شدید گرمی کے تحت جاں بحق ہوئے۔ سعودی عرب کے حکومتی ذراٸع نے منگل کے روز ان اموات کی  تصدیق کی۔

رواں سال حج کے دوران مکہ میں شدید گرمی کا زور رہا۔ شہر بھر کا اوسط درجہ حرارت 52 ڈگری سینٹی گریڈ رہا۔ گرمی کی اس شدت سے عازمین حج کی ایک بڑی تعداد متاثر ہوئی اور فرانسیسی خبر ایجنسی اے ایف پی کے مطابق کم و بیش 550 عازمین حج جاں بحق ہوئے۔

حج 2024 میں ہونے والی اموات میں سب سے زیادہ مصری شہری ہیں۔ اس کے علاوہ انڈونیشیا، اردن ،تیونس اور ایران کے شہری بھی جابحق ہونے والے عازمین میں شامل ہیں۔

ہر سال کی طرح اس سال بھی مکہ مکرمہ میں حج کی ادائیگی کے لیے دنیا بھر سے عازمین حج کی ایک بڑی تعداد جمع تھی۔ حج کی ادائیگی میں بڑھتی ہوئی گرمی اور حجاج کرام کے ہجوم کے سبب عازمین حج کی بڑی تعداد حبس اور لو کا شکار ہوٸ۔حجاج کرام کو اس دوران طبی امداد بھی فراہم کی گٸ۔ اور جاں بحق ہونے والے افراد کو قریبی مردہ خانے میں رکھا گیا۔

گرمی کے سبب رمی جمرات کا سلسلہ بھی روک دیا گیا تھا عازمین کو منی میں اپنے خیموں میں رہنے کی ہدایات جاری کی گٸ تھیں۔

Back to top button